All Pakistani Dramas Lists
Latest Episodes of Dramas - Latest Politics Shows - Latest Politics Discussions

View RSS Feed

All Blog Entries

  1. تم یہ کہتے ہو اب کوئی چارہ نہیں! فیض احمد فیض

    تم یہ کہتے ہو اب کوئی چارہ نہیں


    تم یہ کہتے ہو وہ جنگ ہو بھی چکی
    جس میں رکھا نہیں ہے کسی نے قدم
    کوئی اترا نہ میداں میں، دشمن نہ ہم
    کوئی صف بن نہ پائی، نہ کوئی علم
    منتشرِ دوستوں کو صدا دے سکا
    اجنبی دُشمنوں کا پتا دے سکا
    تم یہ کہتے ہو وہ جنگ ہو بھی چُکی
    جس میں رکھا نہیں ہم نے اب تک قدم


    تم یہ کہتے ہو اب کوئی چارہ نہیں
    جسم خستہ ہے، ہاتھوں میں یارا نہیں
    اپنے بس
    ...
    Categories
    ~**Sha!r!**~
  2. اقتباس: واصف علی واصف

    مشکلات اور حل نہ ہونے والی مشکلات یا انسان کو خدا سے دُور کر دیں گی یا خدا کے قریب کر دیں گے۔
    اگر مشکل آپ کو اللہ سے دور کر رہی ہےتو یہ مشکل کسی قدیم ُبرے عمل کی سزا ہے، تو یہ مشکل ایک سزا ہے!۔

    وہ آدمی جو مشکل میں بھی خدا کے پاس نہیں گیا اس کے لئے مشکل ایک سزا ہے۔ اور اگر مشکلات میں کسی نے اپنے آپ کو خدا کے قریب کر دیا تو ایسی مشکلات تو ہزار بار
    ...
    Categories
    Uncategorized
  3. **اذیت از فرحت عباس شاہ

    "اذیت"

    کتنے چہرے
    دن بھر دھوکہ دیتے ہیں
    کتنی آنکھیں
    دن بھر دھوکہ کھاتی ہیں
    کتنے دل
    ہر روز نئی ویرانی سے
    بھر جاتے ہیں
    مر جاتے ہیں

    لیکن
    تُو

    سب کچھ دیکھتا رہتا ہے خاموشی سے !!۔۔

    Updated 12-10-2012 at 04:43 AM by Sai-e-Lahasil

    Categories
    ~**Sha!r!**~
  4. ﻭﮦ ﺟﻮ ﻋﺸﻖ ﭘﯿﺸﮧ ﺗﮭﮯ۔ ۔۔۔

    ﻭﮦ ﺟﻮ ﻋﺸﻖ ﭘﯿﺸﮧ ﺗﮭﮯ، ﺩﻝ ﻓﺮﻭﺵ ﺗﮭﮯ
    مر گئے! ۔۔
    ﻭﮦ ﮨﻮﺍ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﭼﻠﮯ ﺗﮭﮯ
    ﺍﻭﺭ ﮨﻮﺍ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺑﮑﮭﺮ ﮔﺌﮯ

    ﻭﮦ ﻋﺠﯿﺐ ﻟﻮﮒ ﺗﮭﮯ
    ﺑﺮﮒِ ﺳﺒﺰ ﮐﻮ ﺑﺮﮒِ ﺯﺭﺩ ﮐﺎ ﺭﻭﭖ ﺩﮬﺎﺭﺗﮯ ﺩﯾﮑﮫ ﮐﺮ
    ﺭُﺥِ ﺯﺭﺩ ﺍﺷﮑﻮﮞ ﺳﮯ ﮈﮬﺎﻧﭗ ﮐﺮ
    ﺑﮭﺮﮮ ﮔﻠﺸﻨﻮﮞ ﺳﮯ

    ﻣﺜﺎﻝِ ﺳﺎیہِ ﺍﺑﺮ
    ﭘﻞ ﻣﯿﮟ ﮔﺰﺭ ﮔﺌﮯ

    ﻭﮦ ﻗﻠﻨﺪﺭﺍﻧﮧ ﻭﻗﺎﺭ ﺗﻦ ﭘﮧ ﻟﭙﯿﭧ ﮐﺮ
    ﮔﮭﻨﮯ ﺟﻨﮕﻠﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﮔِﮭﺮﯼ ﮨﻮﺋﯽ
    ﮐُﮭﻠﯽ ﻭﺍﺩﯾﻮﮞ ﮐﯽ ﺑﺴﯿﻂ ﺩﮬﻨﺪ ﻣﯿﮟ
    ﺭﻓﺘﮧ ﺭﻓﺘﮧ ﺍﺗﺮ ﮔﺌﮯ۔ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ !!۔۔۔

    Categories
    ~**Sha!r!**~
  5. ﻣﺠﮭﮯ ﮔﻤﻨﺎﻡ ﺭﮨﻨﮯ ﮐﺎ ۔ ۔۔ **

    ﻣﺠﮭﮯ ﮔﻤﻨﺎﻡ ﺭﮨﻨﮯ ﮐﺎ ﮐچھ ﺍﯾﺴﺎ ﺷﻮﻕ ﮨﮯ ﮨﻤﺪم
    ﮐﺴﯽ ﺑﮯ ﻧﺎﻡ ﺻﺤﺮﺍ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﭩﮑﺘﯽ ﺩﮬﻮﭖ ﮨﻮ ﺟﯿﺴﮯ

    ﺟﮩﺎﮞ ﺳﺎئے ﺗﺮﺳﺘﮯ ﮨﻮﮞ، ﮐﺴﯽ ﭘﯿﮑﺮ ﮐﯽ ﺁﮨﭧ ﮐﻮ
    ﺟﮩﺎﮞ ﺯﻧﺪﮦ ﻧﮧ ﮨﻮ ﮐﻮﺋﯽ، ﺟﮩﺎﮞ ﺑﺲ ﻣﻮﺕ ﺭﮨﺘﯽ ﮨﻮ


    ﯾﺎ ﮐﭽﮫ ﺍﯾﺴﮯ ﮐﮧ ﺩﺭﯾﺎ ﮐﮯ ﮐﮩﯿﮟ ﺍُﺱ ﭘﺎﺭ ﮐﯿﮑﺮ ﭘﺮ
    ﮐﺴﯽ ﭼﮍﯾﺎ ﮐﮯ ﺑﭽﮯ ﮐﯽ ﺗﮍﭘﺘﯽ ﭘﯿﺎﺱ ﮨﻮ ﺟﯿﺴﮯ

    ﮐﮧ ﺟﺲ ﮐﯽ ﺯﻧﺪﮔﯽ ﮐﮯ ﺩﻥ ﺑﮩﺖ ﺑﮯ ﺟﺎﻥ ﮔﺰﺭﮮ ﮨﻮﮞ
    ﺟﻮ ﺍﮌﻧﮯ ﮐﻮ ﺗﺮﺳﺘﺎ ﮨﻮ، ﻣﮕﺮ ﺣﺴﺮﺕ ﺩﻡِ ﺁﺧﺮ
    ﻭﮦ ﺍﭘﻨﮯ ﮔﮭﻮﻧﺴﻠﮯ ﻣﯿﮟ ﮨﯽ کچھ ﺍﯾﺴﮯ ﺟﺎﻥ ﺩﮮ ﺟﯿﺴﮯ

    ﮨﺰﺍﺭﻭﮞ ____ ﮐﺮﻭﭨﻮﮞ
    ...
    Categories
    ~**Sha!r!**~
Page 6 of 424 First ... 456781656106 ... Last

Log in